خاک پاک

اے مرے وطن کی مٹی اے خاک پاک
تو ہے خلد بریں میری تہہ نیلگوں افلاک



ترے گنبدوں پے ہیں فدا فلک کے ستارے
نظر آتا ہے ان میں عکس شاہ لولاک



تری بنیادوں میں ہے خاک کربلا
تری خاک سے ہو فرشتوں کی قبا چاک



ترے صحرا ہیں چاندی ترے میداں ہیں سونا
مانند خورشید ضو افشاں ہیں تری املاک



ترے شہیدوں کی للکار نے دیا پہاڑوں کو دعشتہ پیمائی
اپنے چمن کے آشیاں سے ہے زاہد یہ وسعت افلاک

 


Poetry By Zahid Ikram

Back to Index Page